widget

Friday, 14 November 2014

waqat ki rah guzar par


وقت کی راہ گزر پر

سارے بول رکھ دیے ہیں
سکوت میں لہو لہو
وحشت سے تار تار
سناٹوں سے لتھڑے هوئے
ہو سکے تو سُن لینا
ہم نے شہرِ خموشاں سے
....اب لمبی چُپ مانگ لی ہے